Pak Updates - پاک اپڈیٹس
پاکستان، سیاست، کھیل، بزنس، تفریح، تعلیم، صحت، طرز زندگی ... کے بارے میں تازہ ترین خبریں

پالیسی نہ بننے سے 456 پٹرول پمپس لیز نہ ہو سکے ،حکومت کو کروڑوں کا نقصان

لاہور(افضال طالب سے) صوبہ بھر مین سرکاری زمینوں پر قائم 450 پٹرول پمپس لیز پالیسی نہ بننے کے باعث نیلام نہ ہو سکے جس کے باعث سرکاری خزانے کو سالانہ کروڑوں روپے کا نقصان ہونے لگا ۔ تفصیلات کے مطابق صوبہ بھر مین سالہا سال سے لیز پالیسی وضع نہ ہونے کے باعث لاہور کے علاوہ پنجاب بھر مین سینکڑوں پٹرول پمپس ضلعی انتظامیہ بورڈ آف ریونیو، تحصیل میونسپل ،پنجاب پولیس ، ایگری گیشن ڈیپارٹمنٹ ، سی اینڈ ڈبلیو ، نیشنل ہائی ویز ڈویلپمنٹ اتھارٹیز ، ہاؤسنگ اینڈ فزیکل پلاننگ،امپرومنٹ ٹرسٹ سمیت دیگر محکموں کی ہزاروں کنال ازمین پر 504 پٹرول پمپس بنائے گئے تھے جن کو سیاسی اوراثرورسوخ کی بنیاد پر میرٹ کی بجائے من پسند افراد کو نوازا گیا جس سے سرکاری خزانے کو اب تک اربوں روپے کا نقصان ہو چکا ہے۔سول سوسائٹی کے رہنما عبداللہ ملک کی درخواست پر سابق چیف جسٹس ثاقب نثار نے سوموٹونوٹس لیتے ہوئے تمام سرکاری پٹرول پمپس کا قبضہ لے کر انہین اوپن نیلامی کا حکم دیا ہے جس پرعمل کرتے ہوئے لاہور کی ضلعی انتظامیہ اورکارپوریشن نے چھبیس سال بعد 28 پٹرول پمپس جو ساڑھے تین لاکھ روپے ماہوار کرایہ پر تھے اوپن نیلامی کے ذریعے ان کی آمدن چالیس کروڑ 37 لاکھ سے تجاوز کر دی گئی اسی طرح ایل ڈی اے نے اکیس پٹرول پمپس جن کی آمدن 44 لاکھ سالانہ تھی نیلام کے بعد 38 کروڑ 38 لاکھ روپے تک پہنچ گئی ہے لیکن لاہور کے علاوہ باقی صوبائی اور بلدیاتی اداروں کی ملکیت میں موجود 456 پٹرول پمپس تاحال نیلام نہ ہو سکے ان میں بورڈ آف ریونیو کے ملکیتی سو سے زائد پٹرول پمپس ،ہاؤسنگ اینڈ فزیکل پلاننگ کے چھ ، میونسپل کمیٹی شیخوپورہ ایک ، ڈسٹرکٹ گورنمنٹ رحیم یار خان کا ایک ، امپرومنت ٹرسٹ کے دو ، ٹی ایم اے مری کے تین ، ٹیا یم اے بہاولپور اور چنیوٹ ایک ایک ، ٹی ایم اے بہاولنگر دو ، ہارون آباد تین ، قصوردو، گجرات دو ، سی اینڈ ڈبلیو ڈیپارٹمنٹ کے میانوالی ،جہلم ، ساہیوال ، بور یوالا ،قصوروغیرہ میں 24 نیشنل ہائی ویز شیخوپورہ 22 ،گوجرانوالہ رینالہ خورد ،گوجرانوالہ ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے دو فیصل آبادڈویلپمنٹ اتھارٹی کے پانچ جبکہ محکمہ اوقاف کے اکتیس پٹرول پمپس پنجاب کے مختلف محکموں میں موجود ہیں۔جس سے سرکاری خزانے کو کروڑوں روپے کا نقصانہو رہاہیاس بارے مین سول سوسائٹی کے رہنما عبداللہ ملک ایڈووکیٹ نے بتایا کہ سیکرٹری کالونیز نے سپریم کورٹ میں موقف اختیارکیا تھاکہ لیزنگ پالیسی بنتے ہی پٹرول پمپس نیلام ہو جائیں گے جو ابھی تک نہیں بن سکیصرف لاہورضلعی انتظامیہ اور ایل ڈی اے نے عملدرآمد کروا دیاہے۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Comments
Loading...

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More