Pak Updates - پاک اپڈیٹس
پاکستان، سیاست، کھیل، بزنس، تفریح، تعلیم، صحت، طرز زندگی ... کے بارے میں تازہ ترین خبریں

شاہد خاقان نیب میں پیش مکمل جواب،ریکارڈ نہ دے سکے

اسلام آباد(قاسم نواز عباسی، 92 نیوز رپورٹ)ایل این جی کیس میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نیب کو مکمل جوابات جمع اور مکمل ریکارڈ فراہم نہ کر سکے ، نیب کی تحقیقاتی ٹیم بھی شاہد خاقان عباسی کے جوابات سے غیر مطمئن رہی۔ گذشتہ روز سابق وزیراعظم نیب کے سامنے پیش ہوئے ،ذرائع کے مطابق نیب ٹیم نے جواب جمع کرانے کے لیے سابق وزیر اعظم کو 29 اپریل تک کا وقت دے دیا۔ دوران تفتیش نیب کی تحقیقاتی ٹیم نے سابق وزیراعظم سے مکالمہ کیا کہ آپ کو کہا تھا تمام سوالات کے مکمل جواب دیں ۔ شاہد خاقان عباسی نے کہا تمام جواب اور میں بھی موجود ہوں، نیب ٹیم نے کہا زبانی نہیں تحریری جواب دیں اور جو جواب مانگے ہیں ان کا ریکارڈ بھی دیں۔شاہد خاقان نے کہا پیر تک کا وقت دے دیں۔شاہد خاقان عباسی نے اپنے جواب میں کہا ایل این جی معاہدے ملکی اور بین الاقوامی قوانین کے مطابق کیے ، ملک میں توانائی بحران کی وجہ سے قطر سے ایل این جی دیگر ممالک کی نسبت کم ترین نرخ پر خریدی۔نیب دفتر پہنچنے پر صحافی نے سابق وزیراعظم سے پوچھا 22سوالوں کے جوابات دے چکے ، آج کتنے جواب دیں گے ،انہوں نے کہا جتنے سوال پوچھیں گے اتنے جواب دوں گا۔صحافی نے کہا آج آپ کوگرفتاربھی کیاجاسکتاہے ؟۔ شاہدخاقان عباسی نے کہا جی اگربٹھالیاتوبیٹھ جاؤں گا۔نیب میں پیشی کے بعدصحافی کے سوال آج جلد واپسی ہو گئی، خوش ہیں ؟کے جواب میں انہوں نے کہاآپ کو مایوسی تو نہیں ہوئی ،، ہم تو ہمیشہ خوش رہتے ہیں ، صحافی کے سوال کہ کیا آپ نے سارے سوالوں کے جواب دے دیئے کے جواب میں شاہد خاقان عباسی نے کہا سوالوں کے جواب تو ایک ہی ذات دیتی ہے ،صحافی نے پوچھا نیب نے آپ کو دوبارہ تو نہیں بلایا؟شاہد خاقان نے کہا یہ جب بلائیں گے ،میں آجاوں گا ۔صحافی نے سوال کیا نجی ایئرلائن کاریکارڈآپ سے طلب کیاگیاہے ؟ سابق وزیراعظم نے کہا نہیں میراایئرلائن سے تعلق نہیں،ریکارڈبھی نہیں مانگاگیا

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Comments
Loading...

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More