Pak Updates - پاک اپڈیٹس
پاکستان، سیاست، کھیل، بزنس، تفریح، تعلیم، صحت، طرز زندگی ... کے بارے میں تازہ ترین خبریں

سانحہ کرائسٹ چرچ :ایچ ای سی نے شہید طالبعلم کو ریکوری نوٹس بھجوا دیا

اسلام آباد (نمائندہ دنیا )ہائر ایجوکیشن کمیشن انتظامیہ کی جانب سے کرائسٹ چرچ سانحے میں شہید ہونے والے پاکستانی طالبعلم کو رقم ریکوری کا نوٹس بھجوا دیا گیا،شہید طالبعلم ہارون محمد کو تین کروڑ67لاکھ آٹھ سو بائیس روپے فوری طور پر جمع کرانے کی ہدایت کر دی گئی ،ایچ ای سی کے مراسلہ میں شہید طالبعلم کیلئے ’’اشتہاری‘‘ کا لفظ استعمال کیا گیا ۔مذکورہ طالبعلم این ای سی کے سکالر شپ پر نیوزی لینڈ میں ایم بی اے کی تعلیم حاصل کر نے گیا تھا۔ذرائع کے مطابق نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں شہید ہونے والوں میں ہارون محمد بھی شامل تھے ۔شہادت کے بعد نیوزی لینڈ اور پاکستان کی حکومت نے شہید کو اعزازات سے نوازا ، ذرائع کے مطابق ہائیر ایجوکیشن کی خاتون افسر نے ان کو شہید ماننے سے انکار کردیا ۔ہائیر ایجوکیشن کمیشن کے لیٹر کے مطابق اسلام آباد کے سیکٹرجی نائن کے رہائشی ہارون محمد کے نام تحریر کیا گیا کہ آپ ہائیر ایجوکیشن کمیشن کو تین کروڑ67لاکھ آٹھ سو بائیس روپے ڈی جی فنانس کے نام پے آرڈر کی صورت میں جمع کرائیں بصورت دیگر آپ کیخلاف کارروائی کی جائیگی ، ہارون محمد شہید کی فیملی کے مطابق انہوں نے ہائیر ایجوکیشن کمیشن کو کئی خطوط لکھے ،ای میل کیں کہ ان کے قرض کو سیٹل کیا جائے تاہم ہائیر ایجوکیشن حکام کی طرف سے جواب نہیں دیا گیا۔اب کمیشن نے ایک خط لکھا ہے جس میں ہارون کیلئے لفظ’’ اشتہاری‘‘ استعمال کیا گیا، ہارون کی فیملی کے مطابق ہائیر ایجوکیشن کی خاتون آفیسر کو بتایا کہ ہارون سانحہ کرائسٹ چرچ میں شہید ہوچکے ہیں۔خاتون پراجیکٹ ڈائریکٹر کو نیوزی لینڈ حکومت کی طرف سے جاری کردہ شہدا کی لسٹ بھی فراہم کی گئی تاہم خاتون افسر نے شہدا کی اس لسٹ کو ماننے سے انکار کردیا۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Comments
Loading...

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More