Pak Updates - پاک اپڈیٹس
پاکستان، سیاست، کھیل، بزنس، تفریح، تعلیم، صحت، طرز زندگی ... کے بارے میں تازہ ترین خبریں

بجٹ کا پہلا مرحلہ کل شروع ،قومی ترقیاتی پروگرام 1837 ارب روپے تک محدود

اسلام آباد( ساجد چودھری) وفاقی بجٹ کی منظوری کا پہلا مرحلہ کل 23 مئی سے شروع ہو رہاہے اینول پلان کوآرڈنیشن کمیٹی( اے پی سی سی ) آئندہ مالی سال 2019-20 کے لیے 1837 ارب کے قومی ترقیاتی پلانکی منطوری دے گی ۔ وزیراعظم کے صوابیدی ترقیاتی پروگرام کے لیے الگ سے سو ارب روپے رکھنے کی بھی تجویز ہے ۔ وفاقی ترقیاتی پروگرام کے لیے 925 ارب روپے اور چاروں صوبوں کے ترقیاتی منصوبوں کے لیے 912 ارب روپے رکھنے کی منظوری دی جائے گی ۔ اس کے ساتھ ساتھ اس اجلاس میں آئندہ مالی سال کے لیے معاشی ترقی کے اہداف ، میکرو اکنامک فریم ورک کی بھی منظوری دی جائے گی ۔ وزارت خزانہ کے ذمہ دار ذرائع نے روزنامہ دنیا کو بتایا کہ مشیر خزانہ ڈآکٹر عبدالحفیظ شیخ اور وفاقی وزیر منصوبہ بندی وترقی خسروبختیار اجلاس کی مشترکہ صدارت کریں گے جس میں چاروں صوبوں کے وزرائے خزانہ اور وزرائے ترقی و منصوبہ بندی شرکت کریں گے۔ ذرائع نے بتایا رواں مالی سال کے لیے قومی ترقیاتی پروگرام کا حجم 2043 ارب روپے تھا جس میں وفاقی حکومت کے مجموعی ترقیاتی پروگرام کا حجم 1030 ارب روپے اور چاروں صوبوں کے ترقیاتی پروگرام کا حجم 1013 ارب روپے تھا تاہم آئندہ مالی سال کے لیے وفاقی ترقیاتی پروگرام کے حجم میں 105 ارب روپے کی کمی کردی گئی ہے اسی طرح صوبوں کے ترقیاتی پروگرام کا حجم رواں مالی سال میں 1013 ارب روپے تھا جس مین تقریبا 101 ارب روپے کی کمی کرکے اسے 912 ارب روپے تک لایا جا رہا ہے ۔ دنیا کو دستیاب دیگر تفصیلات کے مطابق نئے وفاقی ترقیات پروگرام میں 375 ارب روپے وفاقی وزارتوں اور ڈویژنوں کے لیے مختص کیے جا رہے ہین پی ایس ڈی پی سے باہر کے ترقیاتی پروگرام کے تحت 250 ارب روپے خرچ کیے جائیں گے نیشنل ہائی وے اتھارٹی اور پاکستان الیکٹرک پاور کمپنی( پیسکو) کے لیے 199 ارب روپے کا ترقیاتی بجٹ رکھنے کافیصلہ کیا گیا ہے ۔ قبائلی علاقوں کو خبیر پختونخوا میں ضم کرنے کے بعد ان کی تعمیر وترقی کے دس سالہ پلان کے تحت بائیس ارب روپے ، شمالی وزیرستان کے بے گھر افراد کی بالی کے لیے 32.5 ارب روپے ، ملک بھر مین اہم منصوبوں ،تنصیبات اور سرمایہ کاروں کی حفاظت کے لیے 32.5 ارب روپے وزیراعظم کے ہنر مند نوجوان پروگرام ( یوتھ سکل ڈیویلپمنٹ پروگرام ) کے لیے دس ارب روپے گرین پاکستان کے لیے ایک ارب روپے اور گیس انفراسٹرکچر ڈویلپمنٹ کے لیے ایک ارب روپے مختص کرنے کی تجویز ہے ۔

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

Comments
Loading...

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More